70

پاکستان میں طاقتور ترین طوفان کاخطرہ!زیر گردش خبروں میں کتنی سچائی ہے ؟ محکمہ موسمیات نے حقیقت بیان کردی

اسلام آباد (این این آئی)محکمہ موسمیات نے کہا ہے کہ پاکستان میں کسی بھی علاقے میں کسی طاقتور ترین طوفان کا کوئی خطرہ نہیں ہے۔محکمہ موسمیات کے ترجمان ڈاکٹر خالد ملک نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے 80 فیصد علاقوں میں مون سون پہلے ہی ختم ہو چکا

ہے اور اس دوران پاکستان کے گردونواح میں موسمی حالات معمول کے مطابق ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ بارشیں کم ہونے کی وجہ سے ان دنوں گرمی اور حبس معمول سے زیادہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ لوگ اس قسم کی افواہوں پر کان نہ دھریں، صرف محکمہ موسمیات کی جاری کردہ خبروں پر انحصار کریں۔محکمہ موسمیات کے مطابق مالاکنڈ، ہزارہ، مردان، پشاور، کوہاٹ، بنوں، راولپنڈی، گوجرانوالہ، لاہور، سرگودھا ڈویژن، اسلام آباد، کشمیر اور گلگت بلتستان میں چند مقامات پر تیز ہواؤں، آندھی اور گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے۔ ملک کے دیگر علاقوں میں موسم گرم اور مرطوب رہے گا۔پیر کو ہزارہ، پشاور، راولپنڈی، سرگودھا، گوجرانوالہ ڈویژن، اسلام آباد، کشمیر اور گلگت بلتستان میں چند مقامات پر تیز ہواؤں، آندھی اور گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے،ملک کے دیگر علاقوں میں موسم گرم اور مرطوب رہیگا۔گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم گرم اور مرطوب رہا تاہم مالاکنڈ، لاہور، فیصل آباد، گوجرانوالہ، سرگودھا اور راولپنڈی ڈویژن میں چند مقامات پر بارش ہوئی۔گزشتہ روز سب سے زیادہ درجہ حرارت سبی میں 43 جبکہ نورپورتھل اور دادو میں 42 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں