100

نگران حکومت کا اہم عہدیدار بالآخر باضابطہ طورپر تحریک انصاف میں شامل ہوگیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک) سابق نگراں وزیر قانون اور سپریم کورٹ بار کے سابق صدر بیرسٹر سید علی ظفر نے تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کردیا۔ اے آر وائی نیوز کے مطابق سابق نگراں حکومت میں بطور وزیر قانون امور انجام دینے والے بیسٹر سید علی ظفر نے تحریک انصاف

کے سینئر رہنما علیم خان کے ہمراہ وزیراعظم عمران خان سے بنی گالہ میں ملاقات کی۔ جس میں موجودہ سیاسی صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔بیرسٹر علی ظفر نے بطور وزیراعظم عمران خان کے اقدامات کی تعریف کی اور تحریک انصاف کی حکومتی کارکردگی کو سراہا۔ انہوں نے پی ٹی آئی میں شمولیت کی خواہش بھی ظاہر کی۔ دورانِ ملاقات سید علی ظفر نے تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا جس پر وزیراعظم عمران خان نے ان کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے پارٹی میں خوش آمدید کہا۔یاد رہے کہ مسلم لیگ ن کی حکومت مکمل ہونے کے بعد 90 روز کے لیے آئین کے مطابق نگراں حکومت قائم کی گئی تھی جس میں سینئر قانون دان بیرسٹر علی ظفر نے بطور وفاقی وزیر ذمہ داری سرانجام دی تھیں۔ واضح رہے کہ بیرسٹر علی ظفر ملک کے نمایاں ماہر قانون ہیں جو صدر سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن بھی رہ چکے ہیں، انہیں سپریم کورٹ نے تاحیات نااہلی کیس میں عدالتی معاون بھی مقرر کیا تھا۔سید علی ظفر قانونی ماہرین میں الگ شناخت رکھتے ہیں جو ممتاز ماہر قانون ایس ایم ظفر کے صاحبزادے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں