81

عوامی رائے پر مبنی تازہ ترین گیلپ سروے: کتنے فیصد پاکستانی عوام موجودہ حکومت کی کارکردگی سے خوش ہے؟ دنگ کر دینے والے نتائج سامنے آگئے

اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) گیلپ سروے میں 55فیصد پاکستانیوں نے حکومت کی معاشی کارکردگی پر عدم اطمینان کا اظہار کردیاہے۔ صرف 42فیصد پاکستانی حکومت کی معاشی کارکردی کو اطمینان بخش قرار دیا۔ سروے کرنے والے بین الاقوامی ادارے گیلپ نے پاکستان میں سروے کیا ہے جس میں یہ بات سامنے آئی ہے جس کے مطابق 55فیصد

پاکستانیوں نے حکومت کی معاشی کارکردگی پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔عوامی رائے پر مبنی گیلپ کے سروے میں عوام کی اکثریت نے وزیراعظم عمران خان کی کارکردگی کو گزشتہ حکومت سے زیادہ خراب قرار دے دیاہے۔ 50فیصد عوام نے کرپشن اور دہشت گردی کے خاتمے کے لیے کیا جانے والے حکومتی اقدامات کی حمایت کر دی جبکہ 47فیصد عوام نے حکومت کی خارجہ پالیسی پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔سروے میں51فیصد پاکستانیوں نے وزیراعظم عمران خان کی کارکردگی کو گزشتہ حکومت سے زیادہ خراب قرار دیاہے جبکہ 21فیصد افراد کو موجودہ اور گزشتہ حکومت میں فرق نظر نہیں آرہاعوامی رائے پر مبنی گیلپ کا تازہ ترین سروے، عثمان بزدار سب سے مقبول ترین وزیراعلی قرار، 37 فیصد عوام نے عثمان بزدار، 34 فیصد نے محمود خان، 30 فیصد نے جام کمال اور 27 فیصد نے مراد علی شاہ کے حق میں فیصلہ دیا۔ مختلف معاملات پر عوام کی رائے پر مبنی سروے کروانے والے ادارے گیلپ پاکستان کی جانب سے صوبائی حکومتوں کی کارکردگی سے متعلق عوامی رائے پر مبنی تازہ ترین سروے کروایا گیا ہے۔گیلپ پاکستان کی جانب سے عوامی رائے پر مبنی تازہ ترین سروے میں عوام سے سوال کیا گیا ہے کہ وہ کس صوبے کے وزیراعلی کی کارکردگی سے کتنا مطمئن ہیں۔ اس سوال کے جواب میں 37 فیصد عوام نے تحریک انصاف کے رہنما اور پنجاب کے وزیراعلی عثمان بزدار کو سب سے زیادہ بہترین، 34 فیصد عوام نے تحریک انصاف کے رہنما اور خیبرپختونخواہ کے وزیراعلی محمود خان کو دوسرا بہترین جبکہ 30 فیصد عوام نے نے بلوچستان کے جام کمال کو تیسرا بہترین وزیراعلی قرار دیا۔سروے کے دوران عوام نے سب سے کم اعتماد سندھ کے وزیراعلی مراد علی شاہ پر کیا جنہیں صرف 27 فیصد عوام کی حمایت حاصل ہو سکی۔ دوسری جانب 55فیصد پاکستانیوں نے حکومت کی معاشی کارکردگی پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ عوامی رائے پر مبنی گیلپ کے سروے میں عوام کی اکثریت نے وزیراعظم عمران خان کی کارکردگی کو گزشتہ حکومت سے زیادہ خراب قرار دے دیاہے۔50فیصد عوام نے کرپشن اور دہشت گردی کے خاتمے کے لیے کیا جانے والے حکومتی اقدامات کی حمایت کر دی جبکہ 47فیصد عوام نے حکومت کی خارجہ پالیسی پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔سروے میں51فیصد پاکستانیوں نے وزیراعظم عمران خان کی کارکردگی کو گزشتہ حکومت سے زیادہ خراب قرار دیاہے جبکہ 21فیصد افراد کو موجودہ اور گزشتہ حکومت میں فرق نظر نہیں آرہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں