20

پاکستانیوں کیلئے 30لاکھ نوکریاں، جرمنی نے شاندار اعلان کردیا

جرمنی (نیوز ڈیسک) جرمنی نے پاکستانیوں کو 3 ملین نوکریاں دینےکی پیشکش کر دی۔ تفصیلات کے مطابق جرمنی کی وزارت داخلہ نے پاکستان کی حکومت کے نام ایک خط لکھا جس میں ملک کے لیے تجربہ کار اور پیشہ ورانہ لیبر فراہم کرنے کے لیے منصونہ بندی کرنے کی درخواست کی۔جرمنی کی نیوز ایجنسی نے بتایا

کہ جرمنی کی وزارت داخلہ کے یورپ ونگ نے پاکستانی حکام کو ایک خط لکھا جس میں ہنر مندر مزدوروں کی فراہمی کی درخواست کی گئی۔اس خط میں مخصوص شعبوں کا بھی تذکرہ کیا گیا ہے جن میں جرمنی کو مزدور درکار ہیں۔ اس رپورٹ کے مطابق جرمنی نے پاکستان سے 3 ملین ہنر مند مزدوروں کی فراہمی کی درخواست کی ہے جس میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ماہرین اور کئی انجینئیرز بھی شامل ہوں گے۔جرمن نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق یہ خط پاکستانی حکومت کو رواں برس 26 اکتوبرکو ارسال کیا گیا تھا، جس میں اس بات کی یقین دہانی کروائی گئی تھی کہ پاکستان کی جانب سے فراہم کیے جانے والے مزدوروں کو باقاعدہ قانونی طریقہ کار سے جرمنی لے جایا جائے گا۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ جرمنی کو ایسے مزدوروں اور آئی ٹی ماہرین سمیت انجینئیرز کی کمی کا سامنا ہے جو 3 سال یا اس سے زائد عرصہ تک ایک کمپنی کے ساتھ کام کر سکیں۔ جس کی وجہ سےمینجرز کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا اور جرمنی نے پاکستان سے مزدوروں لانے اور انہیں ملازمت دینے کے لیے پاکستانی حکام کو خط لکھا۔ جرمنی کو معیشت کے اعتبار سے یورپ کا سب سے بڑا ملک ہونے کا اعزاز حاصل ہے۔ لیبر کی کمی کے باعث جرمنی کی کابینہ نے یہ فیصلہ کیا کہ یورپ کے باہر سے مزدور لائے جائیں گے اور اس حوالے قوانین میں بھی نرمی لائی جائے گی جس کے تحت جرمن حکومت نے پاکستان سے رابطہ کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں